7پاکستانیوں کو دبئی میں گرفتار کر لیا گیا

Loading...

دبئی(نیوز ڈیسک) دبئی میں 7 پاکستانی شہریوں کو چوری کرنے کے الزام میں گرفتار کر لیا گیا ہے۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق گرفتار کیے جانے والے 7 پاکستانی شہریوں پر ایک بکتر بند گاڑی سے 47 کروڑ روپے چْرانے کے الزام میں گرفتار کیا گیا۔ غیر ملکی میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا کہ دبئی میں قانون نافذ کرنے والے اداروں نے 7 پاکستانی شہریوں کو 47 کروڑ روپے چوری کرنے کے الزام میں حراست میں لے لیا۔رپورٹ میں بتایا گیا کہ یہ بکتر بند گاڑی رقم منتقل کرنے والی ایک کمپنی کی تھی۔ کمپنی میں کام کرنے والے تین پاکستانی ڈرائیوروں کو بھی مجرموں سے تعلق ہونے پر گرفتار کیا گیا ہے اور ان سے اس چوری سے متعلق تفتیش بھی کی جا رہی ہے۔ ڈرائیورز کی گرفتاری کے بعد 4 مزید ملزمان کو چوری میں لوجیکل سپورٹ فراہم کرنے پر حراست میں لیا گیا۔قانون نافذ کرنے والے ادارے اس واقعے سے متعلق مزید تفتیش بھی کر رہے ہیں۔سکیورٹی حکام نے بتایا کہ زیر حراست تمام افراد کو اس جْرم کے مرتکب ہونے پر تین سال جیل کاٹنے کے بعد ڈی پورٹ کر دیا جائے گا۔ کمپنی میں کام کرنے والے دو نیپالی گارڈ نے الغریر سینٹر پر اے ٹی ایم مشین میں پیسے ڈالنے کے لیے جانے والے پاکستانی ڈرائیوروں کے ساتھ رابطہ منقطع ہونے پر کمپنی کے مینجر کو آگاہ کیا۔ رابطہ منقطع ہونے کی اطلاع ملتے ہی کمپنی کے ملازمین نے اے ٹی ایم کا رْخ کیا اور وہاں جانے پر دیکھا کہ ٹرک کا انجن چل رہا ہے جبکہ ٹرک ایک گلی میں کھڑا ہوا ہے اور اس میں ڈرائیور بھی موجود نہیں ہے۔جس پر کمپنی ملازمین نے 37 سالہ ڈرائیور اور گاڑی میں موجود رقم کے غائب ہونے پر فوری طور پر پولیس کو مطلع کیا۔ پولیس لیفٹننٹ نے بتایا کہ کرائم سین کی تحقیقات کرنے والوں اور اْنگلیوں کے نشان پہنچاننے والوں کی ایک ماہر ٹیم نے بکتر بند گاڑی کا جائزہ لیا۔ سی سی ٹی وی کیمرے میں واضح طور پر دیکھا گیا کہ گاڑی کے ڈرائیور نے سی سی ٹی وی کیمروں کا رابطہ منقطع کیا جس کے تحت اسے مرکزی ملزم قرار دیا گیا ہے۔

Loading...

اپنا تبصرہ بھیجیں